22 Nov, 2017 | 3 Rabiul Awal, 1439 AH

Can we take loan for car/ house from the bank which claims that they are giving according to the teachings of Islam and is approved by renowned Pakistani Muftis? If yes what things should we have to keep in mind while doing that?

 

 

کیا ہم گاڑی یا گھر کے لئے ادھار لے سکتے ہیں ان بینکوں سے جو دعویٰ کرتے ہیں کہ ہم شریعت کے اصولوں کے مطابق دیتےہیں اور پاکستان کے مشہورمفتیان کرام کی زیر نگرانی اور ان کی تصدیق کے ساتھ کام کر رہے ہیں ۔اگر ایسا ہی ہے تو وہ کونسی باتیں ہیں جو ہمیں ذہن میں رکھنی چاہیں یہ معاملہ کرتے ہوئے۔

الجواب باسم ملھم الصواب

وہ اسلامی بینک جن کاشریعہ بورڈ ہو مثلاً میزان بینک ،بینک اسلامی  وغیرہ تو ان سے معاملات کئے جاسکتے ہیں البتہ بہتر یہی ہے کہ اس میں بھی احتیاط کی جائے ۔

      ان کے علاوہ اگر کوئی بھی بینک والے یہ دعویٰ کرتے ہیں کہ وہ شرعی اصولوں کے مطابق کام کررہے ہیں تو اس کے بارے میں دارالعلوم کراچی سے معلومات حاصل کر لی جائے ۔اس کے بغیر کسی بھی بینک سے معاملات نہ کئے جائیں۔

الجواب صحیح                                واللہ تعالیٰ أعلم بالصواب

عبد الوہاب عفی عنہ                                 عبدالرحمان

عبد النصیر عفی عنہ                                  معہدالفقیر الاسلامی جھنگ

معہد الفقیر الاسلامی جھنگ                     5/1/1436ھ